103

نیتن یاہو پر جنگ کا بھوت سوار ،حملے جاری رکھنے کا اعلان

اسرائیلی وزیراعظم نیتن یاہو نے فلسطین اور غزہ میں جنگ بندی سے متعلق عالمی رہنماﺅں کے مطالبے کو یکسر مسترد کرتے ہوئے کہا کہ شدت پسندی کے خاتمے تک جنگ جاری رہے گی۔اس دوران سیہونی فورسز نے بدھ کو نویں روز بھی غزہ پر فضائی بمباری جاری رکھی جس کے نتیجے میں 6مزید فلسطینی بے گناہ شہری شہید اور کئی گھر زمین بوس ہوگئے۔ادھر حماس نے بھی اپنے جوابی حملوں میں شدت لاتے ہوئے تین اسرائیلی شہریوں کو مار دیا۔ایس این ایس مانیٹرنگ کے مطابق اسرائیل نے آج نویں دن بھی غزہ پر فضائی بمباری کی جس کے نتیجے میں 6 فلسطینی شہید اور کئی گھر مسمار ہوگئے جب کہ حماس کے راکٹ حملوں میں 5 سالہ لڑکے سمیت 3 اسرائیلی مارے گئے۔دس دن سے جاری جھڑپوں میں غزہ میں شہادتوں کی مجموعی تعداد 219 ہوگئی جب کہ اسرائیل کا کہنا ہے کہ حماس کے حملوں میں 130 اسرائیلی شہری بھی مارے گئے۔ادھر جارح پسند وزیراعظم نیتن یاہو نے عالمی رہنماﺅں کی جنگ بندی کے مطالبے کو مسترد کردیا اور روایتی ہٹ دھرمی کا مظاہرہ کرتے ہوئے کہا کہ اسرائیلی شہریوں پر حملے بند ہونے تک مزاحمت کاروں کے خلاف جنگ جاری رہے گی۔نیتن یاہو نے ہرزہ سرائی کرتے ہوئے مزید کہا کہ اسلامی شدت پسندوں کو ایسی ضربیں لگائی ہیں جس کی وہ توقع نہیں کر رہے تھے، جب تک اسرائیلی شہریوں پر حملے بند نہیں ہوتے تب تک جنگ جاری رہے گی۔واضح رہے کہ اسرائیلی حملوں میں شہید ہونے والے 219 فلسطینیوں میں 63 بچے، 36 خواتین اور 16 بزرگ شامل ہیں اور زخمیوں کی تعداد 1500 سے تجاوز کرگئی ہے جب کہ میڈیا ہاﺅس سمیت درجنوں گھر مسمار ہوگئے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں